215

صوبہ میں امسال 6 ملین ایکڑ رقبہ پر کپاس کی کاشت کا ہدف مقرر کیا گیا ہے:سیکرٹری زراعت پنجاب۔۔۔ساہیوال کی مزید خبریں

ساہیوال (رانا محمد یحی فاروقی سے) سیکرٹری زراعت پنجاب محمد محمود نے کہا ہے کہ صوبہ میں امسال 6 ملین ایکڑ رقبہ پر کپاس کی کاشت کا ہدف مقرر کیا گیا ہے جس سے 10 ملین گانٹھ کے پیداواری ہدف کے حصول کی خاطر تمام ممکنہ وسائل بروئے کار لائے جارہے ہیں۔ کپاس کی کاشت 31 مئی تک ہر حالت میں مکمل کی جائے گی۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے ساہیوال میں کپاس کی پیداواری ٹیکنالوجی کے متعلق منعقدہ آگاہی سیمینار کے شرکاءسے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ سیمینار میں ممبران قومی اسمبلی پیر سید عمران احمد ولی شاہ، چوہدری محمد اشرف، ایم پی اے ملک ارشد، وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر آصف علی، ڈائریکٹر جنرلز زراعت سید ظفر یاب حیدر، ڈاکٹر عابد محمود، چوہدری خالد محمود، ڈائریکٹرز ڈاکٹر صغیر احمد، محمد فاروق جاوید، ڈپٹی ڈائریکٹرز نوید عصمت کاہلوں، امتیاز احمد سمیت چیئرمین پی سی پی اے سعد اکبر خان، آصف مجید، راو شاہد اور کاشتکاروں کی کثیر تعداد نے شرکت کی۔ انہوں نے مزید کہا کہ خادم کسان پیکج کے تحت ایک لاکھ ایکڑ کیلئے بیج کپاس کی منتخب اقسام پر کروڑوں روپے کی سبسڈی بحساب 700 روپے فی بیگ فراہم کی جارہی ہے۔ کپاس کے کاشتکاروں کو 14 کروڑ 74 لاکھ روپے کی خطیر رقم سے سپرے مشینری سبسڈی پر فراہم کی گئی ہے۔ کاشتکاروں کو جدید معلومات کی بروقت فراہمی کو یقینی بنانے کیلئے پہلے مرحلے میں ایک لاکھ دس ہزار رجسٹرڈ کاشتکاروں کو سمارٹ فونز کی فراہمی کا سلسلہ جاری ہے۔ صوبائی سیکرٹری نے مزید کہا کہ کسانوں کیلئے فصلوں کی انشورنس سکیم کا آغاز کر دیا گیا ہے جس کے تحت پہلے مرحلے میں خریف 2018 سے کپاس اور دھان کی فصلوں کا ساہیوال، لودھراں، رحیم یار خان اور شیخو پورہ کے اضلاع میں بیمہ کیا جائے گا۔ اس سکیم کے تحت 5 ایکڑ تک اراضی کے کاشتکاروں کیلئے بیمہ کے پریمیم پر 100 فیصد ادائیگی جبکہ 5 سے 25 ایکڑ تک اراضی کے کاشتکاروں کیلئے بیمہ کے پریمیم پر 50 فیصد سبسڈی دی جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ گزشتہ سیزن صوبہ میں ہم نے روئی کی ایک ملین گانٹھوں کا اضافہ کیا۔ محکمہ زراعت کی رہنمائی اور کاشتکاروں کی محنت سے صوبہ پنجاب میں گزشتہ 2 سالوں کے دوران 20لاکھ گانٹھ روئی کا اضافہ ہوا جس سے 200 ارب روپے کا ملکی معیشت کو اضافی فائدہ پہنچا۔ انہوں نے مزید کہا کہ ہم نے 3 ملین گانٹھ بڑھا کر ملکی معیشت میں 300 ارب روپے کا مزید اضافہ ممکن بنانا ہے۔ پانی کی کم دستیابی سے نمٹنے کے لیے حکمت عملی مرتب کر لی گئی ہے تاکہ دستیاب وسائل کے ساتھ کپاس کی کاشت اور پیداوار کے اہداف کا حصول یقینی بنایا جا سکے۔ کاٹن مشن 2025 کی تیاری کا مقصد صوبہ میں 20ملین گانٹھ روئی پیدا کرنا ہے۔ کاٹن مشن ایک روڈ میپ ہے جس کے ذریعے کپاس کو اس کے اصل مقام پر لے کر جانا ہے۔ کاٹن کونسل کی تشکیل کی جاری ہے کاٹن کونسل کی باڈی گورنمنٹ، گروورز، ایپٹما، پی سی جی اے و دیگر پرائیویٹ سیکٹر کے نمائندوں پر مشتمل ہوگی۔ انہوں نے اپنے بیان میں مزید کہا کہ گزشتہ سیزن کے دوران گلابی سنڈی کے تدارک کیلئے پی بی روپس کا کاشتکاروں کو بہت فائدہ ہوا۔ ڈی اے پی پر 150 سے بڑھا کر 300 روپے فی بیگ سبسڈی کی جارہی ہے یہ سبسڈی اسی تناسب سے تمام فاسفورسی کھادوں پر لاگو ہوگی۔ محکمہ زراعت کی فیلڈ فارمیشن کو ہدایت کی گئی ہے کہ وہ فصل پر پہلے سپرے میں تاخیر بارے کاشتکاروں کی رہنمائی کریں۔ سیمینار سے وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر آصف علی، ڈائریکٹر جنرلز ڈاکٹر عابد محمود، سید ظفریاب حیدر، ڈائریکٹر کاٹن ڈاکٹر صغیر احمد، چیئر مین پی سی پی اے سعد اکبر خان، آصف مجید سمیت دیگر نے کپاس کی اہمیت وپیداواری ٹیکنالوجی کے متعلق آگاہی فراہم کی۔

ساہیوال (بیو رو رپورٹ)شہر کے مختلف مقامات پر آتش بازی کے سامان کی شرعام فروخت جاری ،شرلیوں اور پٹاخوں کی وجہ سے مریض اور ضعیف العمر افراد پریشانی میں مبتلا ،ڈی پی او سے نوٹس لینے کا مطالبہ ۔تفصیلات کے مطابق پیر بخاری روڈ ،سر کی بازار ،غلہ منڈی ،9/90ایل ،ڈسپینسری روڈ و دیگر علاقوں میں دو کانوں پر شرلیوں اور پٹاخوں کی شرعام فروخت جاری ہے بچے بآسانی دو کانوں سے مذکورہ سامان خرید کر گلیوں میں چلا رہے ہیں جن کے باعث بزرگ ،مردو خوا تین اور خصوصاً مریض انتہائی پریشانی کا شکار ہیں شہریوں نے ڈی پی او ساہیوال سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے۔

ساہیوال (بیو رو رپورٹ)ڈسٹرکٹ فوڈ کنٹرولر فیصل شریف نے کہا ہے کہ کاشتکار باردانے کے حصول کے لئے درخواستیں 20اپریل تک جمع کروائیں تا کہ شفا ف پروسیجر کے بعد باردانے کی تقسیم کا عمل شروع کیا جائے -ضلع میںکاشتکاروں سے 1لاکھ97 ہزار میٹرک ٹن خریدی جائے گی جبکہ اس سلسلے میں21خریداری مراکز سنٹر قائم کئے جائیں گے-یہ بات انہوں نے اپنے دفتر سے جاری ہونے والی پریس ریلیز بتائی -انہوں نے بتایا کہ باردانے کے حصول کے لئے درخواست کے ساتھ شناختی کارڈ کی کاپی اور اپنا رابطہ نمبر ضرور لکھیں ،درخواست جمع کرواتے وقت سنٹر کو آرڈینیٹر سے رسید ضرور لیں جس پر پرائرٹی نمبر لکھا ہو گا -فیصل شریف نے کہا کہ 24اپریل سے باردانے کا اجراءشروع کر دیا جائے گا اور یہ مرحلہ آئندہ 30روز تک جاری رہے گا -انہوں نے مزید بتایا کہ کاشتکاروں کو جیوٹ باردانہ فی بیگ 152.50روپے اور پولیتھین بیگ کیلئے36.65روپے سکیورٹی دینا ہو گی جبکہ 4ایکٹر تک کے کاشتکار گریڈ 17کے آفیسر کی شخصی ضمانت پر بغیر سکیورٹی کے بیگ حاصل کر سکتے ہیں-انہوں نے بتایا کہ امسال گندم کا فی من ریٹ 1300روپے رکھا گیا ہے اور خریداری مراکز پر کاشتکاروں کو تما م بنیادی سہولیات فراہم کی جائیں گی –

ساہیوال (بیو رو رپورٹ)ڈسٹرکٹ پولیس آفیسرمحمد عاطف اکرام نے ساہیوال کو جرائم سے پاک کرنے کا عزم کر رکھا ہے اس سلسلہ میں عوام کے جان و مال کے تحفظ کو یقینی بناتے ہوئے منظم جرائم پیشہ عناصراور گینگز کے خلاف پولیس تھانہ اوکانوالہ بنگلہ، تھانہ شاہکوٹ،تھانہ غازی آباد،تھانہ کمیر اور تھانہ فر ید ٹاﺅن نے سرقہ بالجبراور،سرقہ مویشی گینگ کی وارداتیں کرنے والے پانچ گینگزعظیم عرف عظیمی راجپوت گینگ، ناصر عرف ناصری گینگ، امتیاز مغل گینگ ،احسا ن بھٹی گینگ اورفیاض عرف فیاضی جوئیہ گینگ کے 15 ارکان کو انکے سرغنہ سمیت گرفتار کرکے ان کے قبضہ سے لاکھوں روپے مالیت کے موبائل فون اسیسریز ، ،موٹرسائیکلیں،مال مویشی، نقدی اور بھاری تعداد میں ناجائز اسلحہ برآمد کر لیا ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے اخباری نمائندوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا ۔انہوں نے کہا کہ ملزمان ، راہزنی اورہاﺅس رابری جیسے سنگین جرائم میں ملوث ہیں۔ملزمان کی گرفتاری کے لیے مقامی پولیس نے ایس پی انوسٹی گیشن محمد نوید ارشاد کی زیر نگرانی ڈی ایس پی سٹی سرکل ملک شکیل احمد، ڈی ایس پی صدر سرکل وسیم احمد اور ڈی ایس پی چیچہ وطنی سرکل امجد جاوید کمبوہ کی زیر قیادت سب انسپکٹر اعجاز اسلم ایس ایچ او تھانہ اوکانوالہ بنگلہ، انسپکٹراللہ دتہ ایس ایچ او تھانہ شاہکوٹ، سب انسپکٹرمحمد اشرف ایس ایچ او تھانہ غازی آباد، سب انسپکٹرمحمد اشرف ایس ایچ او تھانہ کمیر اورسب انسپکٹرذیشان بشیرایس ایچ اوتھانہ فریدٹاﺅن ودیگر ملازمان پر مشتمل ٹیمیں تشکیل دیں۔ جنہوں نے شب و روز محنت اور جدید سائینٹیفک طریقہ تفتیش کے ذریعے ان گینگز کے سرغنہ عظیم عرف عظیمی راجپوت گینگ،ناصر عرف ناصری گینگ، امتیاز مغل گینگ،احسا ن بھٹی گینگ اورفیاض عرف فیاضی جوئیہ گینگ کو 10 ساتھیوںسمیت گرفتار کر کے ان کے قبضہ سے 5عددموٹرسائیکلیں، 02عدد موبائل فونز معہ موبائل اسیسریز، 7عدد شاخ بکریاںایک عدد بھینس ایک عدد گائے،ایک عددراس بیل ،ایک عددبچھڑااورنقدی وغیرہ کل مالیت مال مسروقہ بازیافتہ 15لاکھ 6ہزارتین سوتیس روپے اور ناجائز اسلحہ رائفل 1عدد پسٹل 30بور8عدد ، ریوالور 1عدد، اور متعددگولیاں برآمد کر لی ہیں ۔ ان گینگزکے باقی ملزمان ٹریس ہو چکے ہیں جن کے نام صیغہ راز میں رکھے جا رہے ہیں ۔ملزمان پولیس ضلع ساہیوال کو متعدد وارداتوں میں مطلوب تھے ۔ انہوں نے پولیس ٹیموں کی کارکردگی کو سراہتے ہوئے نقد انعام اور سرٹیفکیٹس کا اعلان کیا۔

ساہیوال (بیو رو رپورٹ) نہر میں ڈوبنے والے 10سالہ بچہ کی 3دن بعد بر لاش آمد ۔ تفصیلات کے مطابق محلہ محمدپورہ کے رہائشی جاوید کا 10سالہ بیٹا عاقب بیرون بس اسٹینڈ کے قریب نہر 9۔ ایل کے کنارے کھیل رہا تھاکہ اچانک پاوں پھسلنے کی وجہ سے نہر میں گر کر ڈوب گیا تھا جس کی لاش 3دن بعد 9/132ایل سے برآمد ہو گئی ہے ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں