46

تھانہ کلرکہار پولیس چوکی بوچھال کلاں میں پولیس گردی کے ریکارڈ توڑ ڈالے۔۔۔چکوال کی مزید خبریں

چکوال(عبدالغفور منہاس سے)تھانہ کلرکہار پولیس چوکی بوچھال کلاں میں پولیس گردی کے ریکارڈ توڑ ڈالے ۔ مخالف فریق سے بھاری رشوت لے کر آٹھ شریف شہریوں کو حوالات میں بند کر کے وحشیانہ تشدد کا نشانہ بنا ڈالا۔ شریف شہری ناکردہ جرم کی پاداش میں چوبیس گھنٹے سے زائد حوالات میں بند رہے۔جوڈیشل مجسٹریٹ کے حکم پر متاثرین کا ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹر ہسپتال چکوال سے طبی معائنہ ،ڈی ایس پی صدر سرکل نے واقعہ کی تحقیقات شروع کر دیں۔گفانوالہ کے رہائشی نثار احمد، اسد نثار ،فرخ محمود وغیرہ کو پولیس چوکی بوچھال کلاں کے انچارج رحمت اللہ سنگھا نے تھانے طلب کیا ،تینوں افراد دیگر پانچ حمایتوں کے ہمراہ بوچھال کلاں چوکی پہنچے جہاں پررحمت اللہ سنگھا نے مخالف فریق ابراہیم جان کی موجودگی میں محرر عدیل احمد اور دیگر اہلکاروں کے ساتھ مل کر انہیں تشدد کا نشانہ بنانا شروع کر دیا جس سے تین افراد کے دانت ٹوٹ گئے اور منہ اور سر پر زخم آئے جبکہ حکیم خان کا پاﺅں شدید زخمی ہو گیا۔بعد ازاں پولیس چوکی کے عملے نے حوالات میں بند کر دیا۔ رحمت اللہ سنگھا نے پولیس گردی کے بعد متاثرہ فریق سے مطالبہ کیا کہ وہ اپنے مخالف فریق ابراہیم جان کوجائیداد لکھ کر دے جس کا مقدمہ عدالت میں زیر سماعت ہے۔ انکار پر ڈنڈوں اور بندوق کے بٹوں سے زدوکوب کیا۔ معززین کی مداخلت پر جان چھوٹی ۔متاثرین نثار احمد،محمد اسد اور فرخ محمود نے جوڈیشل مجسٹریٹ تھانہ کلرکہار کو اس بابت درخواست گزاری، جوڈیشل مجسٹریٹ نے میڈیکل کرانے کے احکامات جاری کر دئیے ہیں جبکہ متاثرہ فریق کی درخواست پر ڈی ایس پی صدر نے بھی انکوائری شروع کر دی ہے۔

چکوال(بیو رو رپورٹ)تحریک لبیک پاکستان ضلع چکوال نے عام انتخابات کے لیے رابطہ عوام مہم کا آغاز کر دیا۔ روپوال میں منعقدہ اجلاس میں سردار گروپ کے سرکردہ رہنما قاضی جلال احمد نے برادری اور ساتھیوں سمیت سردار گروپ کو خیر آباد کہتے ہوئے تحریک لبیک پاکستان میں شمولیت کا اعلان کر دیا۔روپوال میں منعقدہ اجلاس کی صدارت ضلعی امیر پیر سید حسنین شاہ نے کی ۔تحصیل امیر حافظ مدثر اقبال اور دیگر قائدین نے بھی شرکت کی۔ اس موقع پر سردار گروپ کے سرکردہ رہنما قاضی جلال احمد روپوال نے ساتھیوںاور برادری سمیت تحریک لبیک میں شمولیت کا اعلان کیا۔ قاضی جلال احمد کے ہمراہ قاری اشرف ،حافظ عامر کے علاوہ بولوال، رانجھا، کوٹ چوہدریاں اور بھگوال سے تعلق رکھنے والے تحریک لبیک پاکستان کے جیالوں نے بڑی تعداد میں شرکت کی اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے سید حسنین شاہ نے کہا کہ ہم ملک میں نظام مصطفی ﷺ کے نفاذ کے لیے بڑی سے بڑی قربانی سے بھی دریغ نہیں کرینگے۔ تحصیل امیر حافظ مدثر اقبال کا کہنا تھا کہ ہماری تمام تر وفاداریاں نظام مصطفی کے لیے وقف ہیں۔ قبل ازیں یونین کونسل اور گاﺅں کی سطح پر تحریک لبیک کی باڈی بھی تشکیل دی گئی۔

چکوال(بیو رو رپورٹ)چکوال میں امسال عید سٹی اور عید میلہ کی تقریبات چوآسیدن شاہ چوک کے قریب بندھن میرج ہال میں منعقد کی جائیں گی۔ ضلع بھر سے عوام کو بہترین تفریحی مواقع مہیا کیے جائیں گے اس بات کا اعلان چیف آرگنائزر وعید سٹی و عید میلہ اور سینئر کالم نویس اعجاز عاجز نے صحافیوں سے ملاقات کے دوران کیا ۔انہوں نے بتایا کہ چکوال وہ بدقسمت ضلع ہے جس کی آبادی بیس لاکھ سے زائد ہے مگر ضلع بھر میں سوائے کلرکہار کے کوئی قدرتی تفریحی مقام نہیں اور نہ ہی کسی قسم کے تفریحی مواقع فراہم کیے جاتے ہیں۔ عرصہ دراز سے جشن چکوال اور جشن بہاراں کا بھی انعقاد نہیں کیا جا رہا ہے۔انہوں نے کہا کہ وہ ضلع چکوال کے عوام کی خواہش ضرور پوری کریں گے اور سابقہ عید میلہ سے بھی دو قدم آگے بڑھتے ہوئے عوام کو ایسی تفریح فراہم کریں گے جو مدتوں یاد رکھی جائے گی۔اعجاز عاجز نے بتایا کہ مجوزہ عید سٹی اور عید میلہ میں عوام کو فول پروف سیکورٹی اور خوشگوار و بہترین ماحول مہیا کرنے کی ہر ممکن کوشش کی جائے گی ۔

چکوال(بیو رو رپورٹ)کروڑوں روپے کی لاگت سے تعمیر ہونے والے ماڈل بازار کا افتتاح ہونے سے قبل ہی سیوریج کا گندا پانی روڈ پر کھڑا ہو گیا جس کی وجہ سے لوگوں کو شدید مشکلات کا سامنا کرناپڑ رہا ہے۔ہر آنے جانے والے شخص کو گندگی اور بدبو سے گزر کر جانا پڑتا ہے۔عوام نے نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے۔

چکوال(بیو رو رپورٹ)چکوال پنوال روڈ پر ٹھیکیدار سڑک پر روڑی ڈال کر اور نالے ادھورے چھوڑ کر غائب ہو گیا، جس کی وجہ سے درجنوں دیہاتوں اور ہزاروں افراد پر مشتمل روڈ کے ساتھ ملحقہ محلہ جات کو شدیدمشکلات کا سامناکرناپڑ رہا ہے پنوال روڈ جو کہ مصروف ترین روڈ ہے اور ہر وقت ٹریفک رواں دواں رہتی ہے ڈیڑھ کلومیٹر کا
فاصلہ گزشتہ کئی سالوں سے مرمت نہیں ہو رہا چند ماہ قبل ٹھیکیدار نے سڑک کی مرمت کا کام شروع کیا تھا مگر نالے ادھورے چھوڑ کر روڑی ڈال کر ٹھیکیدار غائب ہو چکا ہے۔اراکین اسمبلی اور ڈپٹی کمشنر اس امر کی جانب توجہ دیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں