44

ملک بھر کی طرح ضلع چکوال میں بھی پاکستان تحریک انصاف پہلے اور مسلم لیگ ن دوسرے نمبر پر چلی گئی،،،چکوال کی مزید خبریں

چکوال(عبدالغفور منہاس سے)حالیہ عام انتخابات نے ضلع چکوال میں پارٹی پوزیشن واضح کر دی،ملک بھر کی طرح ضلع چکوال میں بھی پاکستان تحریک انصاف پہلے اور مسلم لیگ ن دوسرے نمبر پر چلی گئی جبکہ تحریک لبیک نے تیسرا نمبر حاصل کرلیا ہے۔ مسلم لیگ ن عرصہ دراز سے ضلع چکوال کے اقتدار اور سیاست پر راج کر رہی تھی 25جولائی کے انتخابات نے ضلع چکوال میں سیاسی تبدیلی کی بنیاد رکھی اور پاکستان تحریک انصاف چھلانگ لگا کر پہلے نمبر پر آگئی۔ مضبوط قلعہ نئے پاکستان کی زد میں آ گیا،ضلع چکوال مسلم لیگ ن کا مضبوط قلعہ مانا جاتا تھا مگراب یہ قلعہ پی ٹی آئی کا بن چکا ہے اور پانچ نشستیں پی ٹی آئی نے حاصل کر لی ہیں۔ پیپلزپارٹی ایسی بد نصیب پارٹی ہے جو اپنے دور حکومت میں ہی تنزلیوں کو چھونے لگی تھی آج اس پارٹی کا نام و نشان تک مٹ چکا ہے اور یہ سب کچھ کیادھرا اس کی اپنی قیادت کا ہے۔ دوسری جانب تحریک لبیک پاکستان نے مختصر ترین عرصہ میں اپنا ایک نام بنا کر تیسری پوزیشن حاصل کر لی ہے اور جس انداز میں تحریک لبیک نے چند ماہ میں اپنی جگہ بنا کر تیسری پوزیشن حاصل کی اس سے واضح ہوتا ہے کہ بہت جلد یہ پارٹی ملک کی نمبر ون پارٹی ہوگی اور اگر تحریک انصاف نے اپنے کئے گئے وعدے پورے نہ کیے تو پھر تحریک لبیک اسے ٹف ٹائم دے گی۔

چکوال(بیورو رپورٹ) یونین کونسل نمبر ون میں واحد وارڈ نمبر4میں چوہدری سلطان حیدر32ووٹوں سے کامیاب ہوئے، یاد رہے 2002ءکے الیکشن میں عابد حسین کونسلر اور حاجی خالق کونسلر نے عوامی اتحاد سے بغاوت کر کے مسلم لیگ ن کی حمایت کی تھی اور باقی تمام کھڑپینچ دوسری طرف سے تب1300ووٹ کی لیڈ سے یونین کونسل نمبر1میں کامیابی نصیب ہوئی اور پچھلے ضمنی الیکشن 2018ءمیں چوہدری سلطان حیدر نے339ووٹ لے کر وارڈ نمبر4میں کامیابی حاصل کی تھی اور اب392ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔ یہ سارا کریڈٹ وارڈ نمبر4کے کونسلر عابد منہاس کے نام جاتا ہے۔عابد منہاس کی انتھک محنت رنگ لائی اور ہمیشہ کی طرح چوہدری لیاقت کا گھرانہ یہاں سے کامیاب ہوا۔ یہاں سے یاسر سرفراز نے 360ووٹ حاصل کیے۔

چکوال(بیورو رپورٹ)عام انتخابات میں مسلم لیگ ن کی ناکامی نے چکوال کی سیاست میں نیا رخ اختیار کیا ہے اور سلطان حیدر گروپ کے قیام کے امکانات پیدا ہو گئے ہیں۔ چھپڑ بازار کے الیکشن میں ناکامی کے بعد جس طرح مرحوم چوہدری لیاقت علی خان نے سیاست کو نیا رخ دے کر بلدیاتی سیاست میں حصہ لینے کا اعلان کیا تھا اور اپنے آپ کو ناقابل شکست بنایا تھا بالکل اسی طرح 2018ءکے الیکشن میں ناکامی کے بعد چوہدری سلطان حیدر گروپ کے قیام کے امکانات روشن ہو گئے ہیں۔ سلطان حیدر گروپ چکوال کی سیاست میں نیا رخ لائے گا اور مستقبل میں اس کے مثبت ثمرات مرتب ہونگے۔چوہدری لیاقت علی خان نے 2013ءکے انتخابات میں الیکشن لڑا اور61467ووٹ حاصل کیے تھے نئی مردم شماری کے بعد 2018ءکے الیکشن منعقد ہوئے تو اس میں جہاں آبادی بڑھی وہاںپر چوہدری سلطان حیدر کے ووٹ بینک میں بھی اضافہ ہوا اور انہوں نے64456ووٹ حاصل کیے۔

چکوال(بیورو رپورٹ)حلقہ این اے64میں سردار ذوالفقار دلہہ کی جیت سردار غلام عباس کی مرہون منت ہے، اگر سردار غلام عباس کی بیساکھی ذوالفقار دلہہ کو نہ ملتی تو وہ کبھی کامیاب نہیں ہو سکتے تھے، سردار غلام عباس کے 10828ووٹ ذوالفقار دلہہ کو پول ہوئے جبکہ پارٹی کے صرف54387ووٹ ذوالفقار دلہہ کو ملے۔ اگر سردار غلام عباس کا ساتھ نہ ہوتا تو وہ کسی صورت کامیاب نہیں ہو سکتے تھے۔

چکوال(بیورو رپورٹ) ملک جبار احمد چلہ اور راجہ رضوان نے پیپلزپارٹی کی لاج رکھ لی اور عین آخری وقت میں جب مقامی قیادت کی نااہلی کی وجہ سے کوئی امیدوار سامنے نہ تھا دونوں امیدواروں نے پارٹی کا نام زندہ رکھنے کے لیے الیکشن میں حصہ لینے کا فیصلہ کیا، ملک جبار چلہ نے8241جبکہ راجہ رضوان نے8105ووٹ حاصل کیے۔ اس طرح پیپلزپارٹی کا نام زندہ رکھا اور اپنی حاضری بھی ڈالی۔

چکوال(بیورو رپورٹ)پاکستان تحریک انصاف کے سرگرم کارکن حاجی عارف کو ضلعی صدر تاجران پاکستان تحریک انصاف مقرر کر دیا گیا، عمران خان کی ہدایت پر ان کی تقرری عمل میں لائی گئی، جس کا گزشتہ روز نوٹیفکیشن بھی جاری کر دیا گیا ہے۔ملک شاہد اقبال ایڈووکیٹ،شیخ وقار علی، قاضی طلعت اور دیگر نے حاجی عارف کو ضلعی صدر تاجران پاکستان تحریک انصاف مقررہونے پر مبارکباد دی ہے۔

چکوال(بیورو رپورٹ)منشیات فروشوں کے خلاف کاروائیوں پر ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر کا چکوال پولیس کے فرض شناس اے ایس آئی ضمیر حسین کو نقد انعام اور سرٹیفکیٹ، اے ایس آئی ضمیر حسین نے انسانیت کے دشمن منشیات فروشوںکو گرفتار کر کے ان کے خلاف کاروائی عمل میں لائی تھی۔ ان کی کارکردگی کے اعتراف میں ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر عادل میمن نے انہیں دس ہزار روپے نقد انعام اور تعریفی سرٹیفکیٹ سے نوازا۔

چکوال(بیورو رپورٹ) محکمہ انٹی کرپشن نے ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن آفس پر چھاپہ مار کر کانسٹیبل کو رشوت لیتے ہوئے رنگے ہاتھوں گرفتار کرلیا، کانسٹیبل ناصر عباس اپنے افسران کی ایماءپر شراب پرمٹ کے اجراءکے لیے 21ہزار روپے رشوت وصول کر رہا تھا کہ انٹی کرپشن کا چھاپہ پڑ گیا۔ حمیر مسیح کی طرف سے انٹی کرپشن کو دی جانے والی درخواست کے مطابق اس نے شراب پرمٹ کے لیے ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن آفس رابطہ کیا جہاں اس سے تین ہزار روپے پرمٹ رشوت طلب کی گئی ،اس نے سات شراب پرمٹ حاصل کرنا تھے جس کی بابت اکیس ہزار روپے رشوت میں معاملہ طے پایا۔ سول جج تیمور افضل کی نگرانی میں سرکل آفیسر انٹی کرپشن قیصر ریاض نے اپنی ٹیم کے ہمراہ چھاپہ مارا اور کانسٹیبل ناصر کو رشوت لیتے ہوئے رنگے ہاتھوں گرفتار کرلیا۔

چکوال(بیورو رپورٹ)حرا سیکنڈری سکول چکوال نے میٹرک کے سالانہ امتحانات میں اپنا اعلیٰ اور معیاری رزلٹ دینے کا اعزاز برقرار رکھا۔ حرا سیکنڈری سکول کے 49طلباءو طالبات نے میٹرک کا امتحان دیا اور سو فیصد کامیابی حاصل کی۔ 25طلباءو طالبات نے A+گریڈ اور10طلباءو طالبات نے1000سے زائد نمبرز حاصل کیے۔ آمنہ زمرد نے1064، نور الہدیٰ نے1046، مہزا فاطمہ نے1042،اقصیٰ زینب نے1036،انیسہ تنویر نے1031، ایمن زہرا نے1020، ایمان فاطمہ نے1019اور محمد طلال نے1002نمبر حاصل کیے۔والدین نے سکول ایڈمنسٹریشن اور سٹاف کو مبارک باد دی اور انہیں نمایاں تعلیمی کارکردگی پر خراج تحسین پیش کیا۔

چکوال(بیورو رپورٹ)مسلم لیگ ن نے حالیہ انتخابات میں گو ناکامی کا سامنا کیاہے مگراس کے ووٹ بینک میں کوئی کمی نہیں آئی اور یہ برقرار ہے۔مسلم لیگ ن کے میجر(ر) طاہر اقبال نے 2013ءکے الیکشن میں 130821ووٹ حاصل کیے تھے اور حالیہ انتخابات میں انہوں نے 130051ووٹ حاصل کیے ہیں۔ چوہدری لیاقت علی خان مرحوم نے2013ءکے انتخابات میں 61657ووٹ حاصل کیے تھے جبکہ چوہدری سلطان حیدر علی خان نے اس مرتبہ64456ووٹ حاصل کیے ہیں۔ جس طرح آبادی بڑھی ہے اسی طرح مسلم لیگ ن کا ووٹ بینک بھی بڑھا ہے۔ سابق صوبائی وزیر ملک تنویر اسلم نے 2013ءکے الیکشن میں 74061ووٹ لیے ۔حالیہ الیکشن میں انہوں نے73104ووٹ حاصل کیے۔ مذکورہ حلقہ میں ٹرن آﺅٹ61.40فیصد کے مقابلے میں57.80فیصد رہا۔یہاں یہ امر قابل ذکر ہے کہ حلقہ پی پی21وہ واحد حلقہ ہے جہاںپر مسلم لیگ ن کے امیدوار کا ووٹ بینک گزشتہ انتخابات کی نسبت بڑھتا چلا جا رہا ہے۔

چکوال(بیورو رپورٹ) معروف عالمی روحانی شخصیت فقیر تابش کمال سجادہ نشین سلسلہ اویسیہ کمالیہ نے نومنتخب اراکین اسمبلی سے ملاقاتیں کیں اور انہیں شاندار کامیابی پر مبارکباد دی اور نیک خواہشات کا اظہار کیا۔ فقیر تابش کمال نے نومنتخب اراکین اسمبلی سردار ذوالفقار دلہہ ،ایم پی اے راجہ یاسر سرفراز، راجہ عثمان ہارون ، ایم پی اے حافظ عمار یاسر، ایم پی اے سردار آفتاب اکبر، مخصوص نشستوں پر خاتون رکن قومی اسمبلی فوزیہ بہرام اور سابق ممبر ضلع کونسل ملک فدا حسین کو شاندار کامیابی پر مبارک باد دی اور نیک خواہشات کا اظہار کیا۔ نومنتخب اراکین اسمبلی نے فقیر تابش کمال سے خصوصی دعا کرائی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں