45

اسلامی نظریاتی کونسل نے بیک وقت 3 طلاقوں کو جرم قرار دینے کی تائید کردی

اسلام آباد(پاکستان اپ ڈیٹس ) چیئرمین اسلامی نظریاتی کونسل قبلہ ایاز کا کہنا ہے کہ کونسل نے بیک وقت تین طلاقوں کو قابلِ تعزیر قراردینے کی تائید کی ہے۔اسلام آباد میں اسلامی نظریاتی کونسل کے اجلاس کے بعد چیئرمین کونسل ڈاکٹر قبلہ ایاز نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے بتایا کہ بیک وقت تین طلاقیں بڑا معاشرتی مسئلہ بن گیا ہے، کونسل نے بیک وقت 3 طلاقوں کو جرم قرار دینے کی تائید کردی ہے اور سزا کے لئے علمائے کرام سے مشاورت کی جائے گی۔ڈاکٹرقبلہ ایاز کا کہنا تھا کہ کونسل نے جامع طلاق نامہ بنانے پربھی اتفاق کیا ہے، طلاق نامہ تشکیل دے کروفاقی حکومت کوبھجوائیں گے جب کہ بیک وقت تین طلاقوں کےمعاملے پر بہت جلد کانفرنس بھی بلائی جائے گی۔ ان کا کہنا تھا کہ 16 سے 18 سال سے کم عمر بچے کم سن کہلاتے ہیں اور اسلامی نظریاتی کونسل کم عمری کی شادی کی حوصلہ شکنی کرتی ہے جب کہ حکومت اس حوالے سے آگاہی مہم شروع کرے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں