35

تاریخ میں 27اکتوبر1947کا دن کشمیریوں کیلئے یوم سیاہ کے طور پر یاد رکھا جائے گا: طارق احسان غوری

لاہور (پاکستان اپ ڈیٹس)یو تھ فورم فار کشمیر کے زیر اہتمام آج کشمیریوں پر مظالم اور کشمیر پر بھارتی غاصبانہ قبضہ کے 71سال مکمل ہونے پر یو م سیاہ منایا گیا۔ اس سلسلہ میں پنجاب اسمبلی تا لاہور پر یس کلب کشمیر ریلی نکالی گئی۔ جس کی قیادتیو تھ فورم فار کشمیرکے چیف آرگنائزر طارق احسان غوری نے کی۔ ریلی میں ہزاروں افراد نے شرکت کی۔ طارق غوری نے کہا کہ تاریخ میں 27اکتوبر1947کا دن کشمیریوں کیلئے یوم سیاہ کے طور پر یاد رکھا جائے گا۔کیو نکہ یہی وہ دن ہے جب بھارت نے فوجی طاقت کے بل بوتے پر کشمیر پر غاصبانہ قبضہ کیا۔اور آج 71سال گزرنے کے با وجود کروڑوں کشمیریوں کو جبرًا غلامی کی زنجیروں میں جکڑ رکھا ہے۔10لاکھ سے ذائد کشمیریوں نے جدوجہد آزادی میں اپنی جانوں کی قربانی دی اربوں روپے کی جائیدادیںنذر آتش کی گئیں۔ بھارتی درندوں نے ہزاروں کشمیری خواتین کی آبرو ریزی کی۔ معصوم بچوں کو درندگی کا نشانہ بنایا، نو جوانوں کو ذندہ درگور کیا وادی کشمیر لہو لہوہے۔8لاکھ بھارتی فوج نے کشمیر کو جہنم بنا کر رکھ دیا ہے۔ افسوس عالمی برادری خاموش تماشائی کا کردار ادا کر رہی ہے۔ طارق غوری نے کہا کہ اقوام متحدہ نے کشمیریوں کے حق خودارادیت کے لئے جو قراردادیں منظور کیں وہ ردی کی ٹوکری کی نظر کر دی گئی ہیں۔کشمیر میں آگ اور خون کا کھیل کھیلا جا رہا ہے۔ آج ہم ایک مرتبہ پھر اقوام متحدہ سے مطالبہ کرتے ہیںکہ کشمیریوں کے حق خودارادیت کی قراردادوں پر عملدرآمد کیا جائے۔ کشمیر میں انسانی حقوق کی بد ترین خلاف ورزیاںبند کی جائیںاور بھارتی فوج کو کشمیر سے نکالا جائے۔ ہم کشمیری بھائیوں کو یقین دلاتے ہیں کہ جدوجہد آزادی کی اس جنگ میں وہ اکیلے نہیںپاکستان کا بچہ بچہ اپنے کشمیری بھائیوں کے ساتھ کھڑاہے اور شانہ بشانہ اُن کا ساتھ دے گا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں