39

سیاستدانوں کی نیب قوانین میں ترمیم کی تجویزاورحکام پرتنقید میں کوئی دم نہیں : محمدناصراقبال خان

لاہور(پاکستان اپ ڈیٹس ) ہیومن رائٹس موومنٹ انٹرنیشنل کے مرکزی صدرمحمدناصراقبال خان نے کہا ہے کہ سیاستدانوں کی نیب قوانین میں ترمیم کی تجویز اورحکام پرتنقیدمیں کوئی دم نہیں۔آئین کی طرح نیب قوانین کوموم کی ناک بنانے کی اجازت نہیں دی جاسکتی۔چیئرمین نیب جسٹس (ر)جاویداقبال اورڈی جی نیب شہزادسلیم نے اپنے منصب کاحق اداکردیا،ان کیخلاف پروپیگنڈاکرنیوالے درحقیقت ان کی کمٹمنٹ اورخدمات پرمہرتصدیق ثبت کررہے ہیں۔نیب حکام کیخلاف انتقام کاالزام جھوٹ کاپلندہ ہے۔عام آدمی کے نزدیک نیب حکام کی مجموعی کارکردگی قابل قدراورقابل رشک ہے۔پاکستان میں فوج اورنیب سمیت ان ریاستی اداروں کوزیادہ تنقیدکانشانہ بنایاجاتا ہے جواپنے کام سے انصاف کر تے ہیں۔وہ ایک اجلاس سے خطاب کررہے تھے ۔محمدناصراقبال خان نے مزید کہا کہ ملک میں قانون کی حکمرانی اورانصاف کی فراوانی کیلئے چوروںکے قلوب میں قاضی اورمحتسب کاڈر ہوناازبس ضروری ہے۔نیب اوراحتساب کے ڈر سے انتقام انتقام کا شورمچانیوالے چور باشعورعوام کوگمراہ کرنے میں ناکام رہے،کوئی باضمیر انسان کسی چورکا حامی یاہمدردنہیں ہوسکتا۔انہوں نے کہا کہ اگرپاکستان نے اپنے مخلص دوست چین کی طرح کرپشن کاٹائی ٹینک سمندربردکرناہے توہرسطح پرچوروں کیخلاف کریک ڈاﺅن کرناہوگا۔ ۔نیب حکام معاشرے سے کرپشن ختم کرنے کیلئے چوروں سے مرعو ب ہوئے بغیراپناآئینی کرداراداکر رہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ وزیراعظم عمران خان کابدعنوانی کیخلاف بیانیہ خوش آئند اورحوصلہ افزاءہے۔ریاست نیب سمیت اپنے ریاستی اداروں کی پشت پر کھڑی ہو،ورنہ رٹ برقرارنہیں رہ سکتی ۔انہوں نے کہا کہ ریاست کی بقاءوبہبود کیلئے ریاستی اداروں کوایک دوسرے کا ساتھ دینااورمورال بلندکر ناہوگا،نیب حکام کیخلاف اپوزیشن رہنماﺅں کاماتم فطری ہے لیکن ادارے ایک دوسرے کیخلاف اپنے تحفظات پبلک نہ کریں ۔اگراداروں کے درمیان کوئی ایشوزہیں تو انہیں چاردیواری کے اندرسلجھانے کی ضرورت نہیں۔انہوں نے کہاکہ ریاست کی کامیابی میں ہرریاستی ادارے کااپنااپناآئینی وانتظامی کرداردوررس اہمیت کاحامل ہے،کوئی ادارے دوسرے کوزچ نہ کرے۔اگرپولیس سمیت کسی ادارے کا اہلکار قانون شکنی کاارتکاب کرتاہے توادارہ اس کے فعل کی سزا کامستحق نہیں ہوسکتا ۔ انہوں نے کہا کہ نیب ،ایف آئی اے اورپولیس سمیت دوسرے انتظامی ادارے ایک دوسرے کابازوبن کرریاست کی طاقت اورمضبوطی کیلئے زیادہ بہتراندازسے اپنااپناکرداراداکر سکتے ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں