120

دینی جماعتوں نے ملک بھرمیں یوم تحفظ ناموس رسالت منایا

لاہور(پاکستان اپ ڈیٹس )کل مسالک ورلڈ پاسبان ختم نبوت ،تحریک ناموس رسالت ،جے یو آئی ، جمعیت اہلحدیث ، جمعیت اہلسنت ، تحریک ملت جعفریہ اورچاروں مسالک اتحاد علماءکونسل سمیت تمام مکاتب فکرکی دینی جماعتوںکی طرف سے بیرونی دباﺅپرشاتمہ رسول آسیہ ملعونہ کی رہائی اور توہین رسالت و امتناع قادیانیت ایکٹ پر عملدرآمدنہ کرانے کیخلاف ملک بھرمیں یوم تحفظ ناموس رسالت منایا گیا۔علماء نے مساجد میں اجتماعات جمعہ پراحتجاج اور مذمتی قرارادایں پاس کرائیں جبکہ ملک کے مختلف شہروں کی بڑی بڑی مساجد کے باہربعد نماز جمعہ ورلڈ پاسبان ختم نبوت ودیگرمذہبی جماعتوں کے کارکنوں نے تحفظ ناموس رسالت جلوس وریلیاں نکالیں اور مظاہرے کیے لاہور ہائیکورٹ کے باہر ورلڈ پاسبان ختم نبوت اور الامہ لائرزفورم کے ورکز نے کنوینئر تحریک ناموس رسالت علامہ محمد ممتاز اعوان کی قیادت میں ایک بھرپورتحفظ ناموس رسالت مظاہرہ کیا اور شاتمہ رسول آسیہ ملعونہ کی رہائی کیخلاف سخت احتجاج اور شدید نعرہ بازی کی مظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے علامہ ممتاز اعوان ، عبدالرﺅف چودہری ایڈووکیٹ ،حافظ شعیب الرحمن،میاں اشرف عاصمی ایڈووکیٹ، مولانا محمد حنیف حقانی، علی عمران شاہین،ڈاکٹر شاہد نصیر اور حافظ محمد یعقوب شاہ نے کہاکہ توہین رسالت و امتناع قادیانیت ایکٹ پرعدم عملدرآمد سے انار کی پیدا ہورہی ہے اگر ہم نے ناموس رسالت کی حفاظت نہ کرسکے تو ایسی زندگی سے موت بہتر ہے ناموس رسالت کا تحفظ کرناہر مسلمان پر فرض ہے علامہ ممتاز اعوان نے کہاکہ پر امن تحریک تحفظ ناموس رسالت جاری ہے اور آسیہ ملعونہ رہائی کیخلاف آئندہ تحفظ ناموس رسالت ملین مارچ 27جنوری کو ڈیرہ اسماعیل خان میںہوگا جس میں لاکھوں شمع رسالت کے پروانے شریک ہوکر آقا کی ناموس رسالت کے تحفظ کیلئے تجدید عہدکرینگے ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں