51

بھارتی تسلط سے آزادی ، حق خودارادیت مانگناکشمیریوں کے لئے جرم بنادیا گیا:ڈاکٹر عبدالغفور راشد

لاہور ( پاکستان اپ ڈیٹس ) تحفظ حرمین شریفین کونسل کے چیرمین اور مرکزی جمعیت اہل حدیث کے ناظم ذیلی تنظیمات ڈاکٹر عبدالغفور راشد نے کہا ہے کہ کشمیر میں قتل و غارتگری ہورہی ہے۔ بھارتی تسلط سے آزادی ، حق خودارادیت اور بنیادی شہری حقوق مانگناکشمیریوں کے لئے جرم بنادیا گیا ہے۔ جس کی وجہ سے بھارت کا مکرہ چہرہ بے نقاب ہوگیا ہے۔ ہندوستان سیکولر ہونے کا جھوٹا دعویٰ کرتا ہے ، مگر اقلیتوں کے حقوق کو پامال بھی کررہا ہے۔ ہندو اکثریت کے مقابلے میں مسلمان بھارت کی سب سے بڑی اقلیت ہیں، مگر ان کے حقوق غصب کئے جارہے ہیں اور انہیں فرقہ وارانہ اختلافات میں الجھا کر تقسیم کرنا چاہتے ہیں تاکہ انتہا پسند ہندووں کو آئندہ انتخابات میں زیادہ ووٹ مل سکیں۔مجلس عاملہ کے اجلاس سے خطاب میں انہوں نے کہا کہ بھارت میں جب بھی الیکشن آتا ہے، انسانی جانوں کا ضیاع اور مسلمانوں پر عرصہ حیات تنگ کرنے کے خطرات منڈلانے لگتے ہیں۔ گویا ہندو الیکشن جیتنے کے لئے نہ صرف مسلمانوں کا خون بہاتے ہیں بلکہ پاکستان کے خلاف زبان درازی بھی کرتے ہیں ۔ان کا کہنا تھاکہ الیکشن تو حکومت جیت جاتی ہے مگر معاشرے میں نفرت اور تعصبات موجود رہتے ہیں، جس سے سیکولرازم کے بھارتی دعوے چکنا چور ہوجاتے ہیں۔ ڈاکٹر عبدالغفور راشد نے کہا کہ انسانی حقوق کی پامالی عالمی اداروں کو نظر آرہی ہے اور نہ اقوام متحدہ نے مسئلہ کشمیر کے حل کے لئے کوئی موثر کردار ادا کیا ہے۔ان کا کہناتھا کہ بھارت میں تمام قومیتوںکے حقوق پامال ہورہے ہیں۔ مسلمانوں کے خون کی حیثیت گائے جیسے جانور کے مقابلے میںکچھ بھی نہیں۔مسلمانوں کو گاو کشی کے بہانے سے قتل کیا جارہا ہے۔ایک ساز ش کے تحت بھارت میں مسلمانوں کو تقسیم کرنے کی سازش کی جارہی ہے۔ جس کے لئے سازش کے تحت فرقہ وارانہ تعصبات کو ابھارے جانے کا خدشہ ہے۔ تاکہ افراتفری کو سیاسی ہتھکنڈے کے طور پر استعمال کیا جاسکے ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں