122

گلوبل فاﺅنڈیشن کی 17 وکلا پر مشتمل کمیٹی نے محکمہ اوقاف کو لیگل نوٹس جاری کردیا

کراچی (پاکستان اپ ڈیٹس ) گلوبل فاﺅنڈیشن کی جانب سے محکمہ اوقاف کو 17وکلا پر مشتمل کمیٹی نے لیگل نوٹس جاری کردیا۔ تفصیلات کے مطابق گلوبل فاﺅنڈیشن نے محکمہ اوقاف کو جاری کیے گئے لیگل نوٹس میں یہ استفسار کیا گیا ہے کہ محکمہ اوقاف کراچی کے مختلف مزارات کی بجلی کے بل کیوں ادا نہیں کر رہا۔ مزارات میں نصب چندے کی پیٹیوں سے نکلنے والی رقم کس کے سامنے گنتی کی جاتی ہے اور کہاں خرچ کی جاتی ہے، اس کی فہرست فراہم کی جائے۔ مزارات کے باہر چپل، پھولوں اور چادروں کے ٹھیکے کتنے میں دیے جاتے ہیں اور یہ پیسہ کہاں خرچ ہوتا ہے۔ مزارات سے ملحق اوقاف کی دکانوں ، گھروں اور دیگر سے کرایہ کی مد میں کتنا پیسہ آتا ہے اور کہا ں خرچ ہوتا ہے۔ محکمہ اوقاف کا اپنا بجٹ کتنا ہے اور کہاں خرچ ہوتا ہے۔ اس حوالے سے چیئرمین گلوبل فاﺅنڈیشن محمد احمد کا کہنا ہے کہ مزارات عوام کی عقیدت کے مراکز ہیں۔ زائرین مزارات کی پیٹی میں نقد رقم اور سونے کے زیورات تک چندہ باکس میں ڈالتے ہیں، لہذا ہر کسی کو معلوم ہونا چاہئے کہ یہ سب کہاںخرچ کی جارہی ہے۔ چندوں کی شفافیت کا یہ عالم ہے کہ جن مزارات سے چندے جمع کئے جارہے ہیں وہاں مرمتی کام نہ تو کیا جارہا ہے اور نہ ہی بجلی کے بل ادا ہو رہے ہیں۔ اس حوالے سے گلوبل فاﺅنڈیشن کی 17وکلا پر مشتمل کمیٹی نے ایڈوکیٹ سپریم کورٹ ناصر رضوان خان کی قیادت میں لیگل نوٹس جاری کیا ہے جسمیں ایڈوکیٹ ہائی کورٹ ہاشم صدیقی،مرزا آصف بیگ، آفتاب یار خان، راحیل الدین، محمد اسلم ملک، سید مسرور احمد، جاوید احمد چانڈیو، زیشان اکبر علی، کامران علی کشمیری، چوہدری کاشف غفار، سمیہ طارق، خورشید شاہ، شوکت قائم خانی، جاوید صدیقی، علی محمد لاسی، شفقت مسیح سمیت دیگر وکلا شامل ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں